سیبیل حملوں کی تفصیل
ہوم
آرٹیکلز
سیبیل حملوں کی تفصیل

سیبیل حملوں کی تفصیل

نو آموز
شائع کردہ Dec 7, 2018اپڈیٹ کردہ Jan 4, 2023
2m

سیبیل حملہ، آن لائن سسٹم پر ایک قسم کا سکیورٹی حملہ ہے جہاں ایک شخص متعدد اکاؤنٹس، نوڈز یا کمپیوٹرز تخلیق کرتے ہوئے ایک نیٹ ورک پر کنٹرول رکھنے کی کوشش کرتا ہے۔

یہ اسی طرح آسان ہو سکتا ہے جیسے ایک شخص کا متعدد سوشل میڈیا اکاؤنٹس تخلیق کرنا۔

لیکن کرپٹو کرنسیز کی دنیا میں، مزید متعلقہ مثال یہ ہے جب کوئی شخص بلاک چین نیٹ ورک پر متعدد نوڈز پر کام کر سکتا ہو۔ 

نام میں "سیبیل" کا لفظ ایک کیس اسٹڈی سے مآخوذ کیا گیا ہے، جو کہ ایک عورت Sybil Dorsett کے متعلق تھی، جس کا علاج، تفارقی شناختی اضطراب – جسے کثیر الشخصی عارضہ بھی کہتے ہیں، کے لیے کیا گیا تھا۔


سیبیل حملے کون سے مسائل کا باعث بنتے ہیں؟

  • اگر حملہ آور بہت سی جعلی شناختوں (یا سیبیل شناختوں) کو تخلیق کرتے ہیں تو وہ نیٹ ورک پر قابل اعتماد نوڈز کھو سکتے ہیں۔ پھر وہ دیگر صارفین کو مؤثر انداز میں نیٹ ورک سے بلاک کرتے ہوئے، بلاکس کو وصول یا منتقل کرنے سے انکار کر سکتے ہیں۔

  • حقیقتاً بڑے پیمانے پر سیبیل حملوں میں، جہاں حملہ آور نیٹ ورک کی کمپیوٹنگ پاور کی اکثریت یا ہیش ریٹ کو قابو کرنے کا نظم کر سکتے ہیں، وہیں یہ 51% حملے سرانجام دے سکتے ہیں۔ ان صورتوں میں، وہ ٹرانزیکشنز کی ترتیب کو تبدیل کر سکتے ہیں، اور ٹرانزیکشنز کو تصدیقی عمل سے باز رکھ سکتے ہیں۔ وہ کنٹرول میں ہوتے ہوئے اپنی کی گئی ٹرانزیکشنز کو ریورس بھی کر سکتے ہیں جو کہ دوہرے خرچ کا سبب بنتی ہیں۔ 

کئی برسوں میں، کمپیوٹر کے سائنسدانوں نے، سیبیل حملوں کو جانچنے اور ان سے بچاؤ کے لیے اپنا بہت سارا وقت مختص کیا اور اثر پذیری کے مختلف سطوحات کے ساتھ تحقیق کی۔ ابھی کے لیے، اس کی کوئی دفاعی ضمانت موجود نہیں۔


لہٰذا بلاک چینز کس طرح سے سیبیل حملوں کو کم کرتی ہیں؟

بہت سی بلاک چینز، کام کا ثبوت، اسٹیک کا ثبوت، اور ڈیلیگیٹڈ اسٹیک کا ثبوت جیسے سیبیل حملوں سے بچاؤ میں مدد کے لیے مختلف "معاہداتی الگورتھمز" استعمال کرتی ہیں۔

دراصل یہ معاہداتی الگورتھمز سیبیل حملوں سے نہیں بچاتے، بلکہ حملہ آور کے لیے یہ صرف سیبیل حملے کو کامیابی سے سرانجام دینے کے لیے، انتہائی غیر عملی بناتے ہیں۔

مثلاً، Bitcoin کی بلاک چین نئے بلاکس کی تخلیق کے لیے اصولوں کا ایک مخصوص مجموعہ لاگو کرتی ہے۔

ان اصولوں میں سے ایک یہ ہے کہ نئے بلاک کو تخلیق کرنے کی صلاحیت کا کام کے ثبوت کے میکانزم کی کُل عمل کاری کی طاقت سے متناسب ہونا لازم ہے۔ جس کا مطلب یہ ہے کہ آپ اصل میں نئے بلاک کی تخلیق کے لیے درکار کمپیوٹر کی طاقت کے مالک ہیں، جو کہ اس کی انجام دہی کو حملہ آوروں کے لیے انتہائی مشکل اور مہنگا بناتا ہے۔ 

چونکہ Bitcoin مائننگ انتہائی کڑا عمل ہے، اس لیے مائنرز کو، سیبیل حملے کی کوشش کرنے کی بجائے، مائننگ کو پر اعتماد برقرار رکھنے کے لیے بہت حوصلہ افزائی کرنی چاہیئے۔


سیبیل حملوں کے علاوہ، یہاں چند دیگرعام اقسام کے حملے موجود ہیں۔ مزید کے لیے Binance اکیڈمی سے منسلک رہیں!